اللہ تعالیٰ پر توکل

حضرت داتا گنج بخش علی ہجویریؒ کشف المحجوب میں فرماتے ہیں کہ”ایک دفعہ میں اپنے پیر و مرشد حضرت شیخ ابو الفضل ختلیؒ کے ساتھ بیت الجن سے دمشق کاسفر کر رہا تھا، راستے میں بارش ہو گئی جس کی وجہ سے بہت زیادہ کیچڑ ہوگیا اور ہم بہت ہی مشکل سے چل رہے تھے کہ اچانک میری نظر پیر و مرشد پر پڑی، کیا دیکھتا ہوں کہ اُن کا زیبِ تن کیا ہوا لباس بھی بالکل خشک ہے اور پاﺅں مبارک پر بھی کیچڑ کا کوئی نشان نظر نہ آیا۔

مجھے بڑی حیرت ہوئی، دریافت کیا تو آپؒ نے ارشاد فرمایا کہ، ہاں جب سے میں نے پروردگارِ عالم پر توکل کرتے ہوئے ہر قسم کے وہم وشبہ کو خود سے دور کر دیا ہے اور دل کو حرص و لالچ کی دیوانگی سے محفوظ کر لیا ہے تب سے اللّٰہ رب العزت کی ذاتِ مقدس نے میرے پاﺅں کو کیچڑ سے محفوظ رکھا ہے۔“

حوالہ از کشف المحجوب

پیشکش: فواد دلبر